اسلا م آبا د ہا ئی کو ر ٹ ا ور پشا و ر ہا ئی کو رٹ نے نے تما م نجی ا داروں کو تعطیلا ت کی فیس و صو لی سے رو ک دیا

اسلا م آبا د ہا ئی کو ر ٹ ا ور پشا و ر ہا ئی کو رٹ نے نے تما م نجی ا داروں کو تعطیلا ت کی فیس و صو لی سے رو ک دیا
May 29 10:27 2018 Print This Article

کیپٹل ا یڈمنسٹریشن ا ینڈ ڈو یلپمینٹ ڈو یژن ،پر ا ئیو یٹ ا یجو کیشنل ا نسٹیٹیوشنز ریگو لیٹری اتھا ر ٹی کو موسم گرما کی تعطیلا ت کی فیس وصو لی سے ر و ک دیا گیا 
سلا م آبا د ہا ئی کو ر ٹ ا ور پشا و ر ہا ئی کو رٹ نے نے تما م نجی ا داروں کو تعطیلا ت کی فیس وصولی سے رو ک دیا،نیز لا ہو ر ہا ئی کو ر ٹ نے بھی نو ٹس لے لیا ،۲۰ جو ن کو ا گلی سما عت ہو گی۔
ر پو ر ٹ :سنیا لو د ھی 
لا ہو ر( ۲۵مئی ،بر و زجمعہ ،۲۰۱۸ )اسلا م آبا د ہا ئیکو رٹ کے ا حکا ما ت کے مطا بق نجی ادارو ں کو مو سم گر ما کی تعطیلا ت کی فیس و صو ل نہکر نے کا نو ٹس جا ر ی ہو ا،ا پنجا ب حکو مت نے نجی تعلیمی اداروں کو چھٹیو ں کے دورا ن فیس جمع نہ کر نے کے اْ حکا ما ت کو مختلف ا خبا را ت میں 
ا شتہا رات میں شا ئع کر و ایا جس سے والد ین اس مد ت کے لئے فیس جمع نہیں کرو ا ئیں گے ۔

گز شتہ جمعہ ،سی اے ڈی ڈی کے سیکر ٹر یفر قا ن بہا در خا ن ا و ر پیر ا کے چےئرمین حسنا ت ا حمد قر یشی کو ر ٹ میں جسٹس کے سا منے حا ضر ہو ئے۔جب جسٹس صدیقی نے ا نہو ں سے پو چھا کہ نجی ا سکو لو ں کے ا نتظا میہ کس عر صے کے دورا ن طالب علموں کی چھٹیو ں کے دورا ن فیس کی رقم جمع کر سکتی ہے انہو ں نے جو ا ب دیا کہ لا ہو ر ہا ئیکو رٹ نے مکمل طو ر پر اور پشا ورہا ئیکو رٹ نے جزو ی طو ر پر مو سم گر ما کی چھٹیو ں کے دوران ٹیو شن فیس جمع کر نے سے نجی تعلیمی اداروں کو رو ک د یا۔
ڈ پٹی ا ٹا ر نی جنر ل ا ر شد محمو د کیا نی نے ہا ئی کو ر ٹس کی ہد ا یا ت کی تصدیق کر لی۔تفصیلا ت کے مطا بق ا سلا م آبا د ہائیکورٹ فیصلہ کیا ہے کہ پیرا کو ہدایت کی جا تی ہے ک تما م نجی اداروں کو محدود کیا جا تا ہے جب تک معا ملے کی ا گلی تا ر یخ تک سما عت نہیں ہو تی وہ فیس کی و صولی نہ کرے۔
مزید بتا یا جا تا ہے کہ ایک مشیر نے جب یہ با ت کی تصدیق کی کہ کچھ نجی ا داروں نے فیس و صو ل کر لی ہے ۔ا س کے عو ض میں جسٹس صدیقینے کہا ’’ و ا لد ین ؍طلبا کی طر ف سے پہلے سے ہی فیس کی ر قم کی ا دا ئیگی چھٹیو ں کے بعد کی مد ت کے لیے فیس کے طو رپر ا یڈ جسٹ کی جا ئیں گی۔‘‘
مز ید ا س معا ملہ کو ۲۰ جو ن تک ملتو ی کر دیا گیا تھا ۔و ا لد ین سے با ت کر تے ہو ئے ا نہو ں نے کہا ہے کہ ڈو یثر ن پبلک سکو ل نے عدلیہ کے فیصلے کی مذمت کی ہے اور انہو ں نے ا س پر عملدرآمد نہیں کیا۔لا ہور ہا ئیکو رٹ نے ا س با ت کاسختی  سےنوٹس لیا ہے ۔و ا لد ین نے کہا کہ مڈ ل کلا سکے لیے یہ بہت پر یشا نی کا با عث بن چکا ہے ا یلیٹ کلا س کے لو گ اس کی ا دا ئیگی آسانی سے کر سکتے ہیں ۔پر یشا ن و الد ین کی ہا ئیکو رٹ سے ا پیل ہے کہ و ہ ا ن نجی ا داروں کو فیس کا نو ٹس جا ر ی کر ے جس سے ہما ر ی پر یشا نی ختم ہو۔

 ذریعہ تصویر:کشمیرریڈرڈاٹ کام اورڈان

Print this entry

Comments

comments

  Categories: