عورتوں کا عالمی دن؛ حقیقی یا محض تقلیدی

عورتوں کا عالمی دن؛ حقیقی یا محض تقلیدی
March 08 20:26 2018 Print This Article


تحریر:ابوحمدان
عورت کی اہمیت ، عورت کی محبت اور عورت کی حفاظت کی بابت آج ہر طرف خوب چرچا ہوگا۔ کہیں پھول تقسیم ہوں گے تو کہیں اچھے کھانے کھلائے جائیں گے۔ کہیں رنگا رنگ تقریبات ہوں گی تو کہیں اخباروں کی زینت لینے والی دلربا تصاویر۔
بلاشبہ یہ سب کچھ اس عورت کو خراج تحسین پیش کرنے کیلئے ہی ہوگا جو سارا سال پیار محبت شفقت اور اپنائیت بکھیرتی دکھائی دیتی ہے۔
لیکن لمحہ فکریہ یہ ہے کہ عورت کو یہ تمغہ محض یک روزہ جشن میں کیوں دیا جارہا ہے ؟

عورت جو ہر روپ میں ہی پیار کا سرچشمہ ہے۔ کہیں وہ ماں کے روپ میں محبت اور شفقت کا پہاڑ ہے تو کہیں بہن کے روپ میں ایک مان۔ کہیں وہ بیوی کے روپ میں اپنا سب کچھ بخوشی قربان کردینے والی ہستی ہے تو کہیں بیٹی کے روپ میں ایک رحمت۔
مگر، ذرا ایک لمحہ کیلئے سوچیں کہ یہ سارے روپ ایک عورت اکیلے نبھانے والی اپنی ساری عمر مردوں کی خوشی کیلئے صرف کردیتی ہے لیکن اس ذات کیلئے محض ایک دن کا جشن ! ایک دن کی خوشی !
کیا یہ اس بابرکت وجود کے ساتھ ناانصافی نہیں ؟

Print this entry

Comments

comments