موروثی سیاست ایک لمحہ فکریہ!!!

موروثی سیاست ایک لمحہ فکریہ!!!
February 13 01:43 2018 Print This Article

م–موروثی سیاست ایک لمحہ فکریہ
تحریر: ابوحمدانؔ
لودھراں -این اے 154 میں ہونے والے انتخابات کے نتائج نے جہاں جانگیر ترین کی نا اہلی پر مہر ثبت کی وہیں عمران خان کیلئے بھی ایک پیغام دیا کہ موروثی سیاست ایک سم قاتل ہے ، جس کا چکھنا خواہ کتنا ہی ناگزیر کیوں نہ ہو ، بالآخر موت حتمی ہوتی ہے۔
تحریک انصاف جو ابتداء سے ہی موروثی سیاست کے خلاف علم بلند کرتی دکھائی دیتی تھی ، آج خود ہی اسی دلدل میں آ پھنسی ہے۔ علی ترین کی بدترین شکست درحقیقت جمہوریت کی فتح ہے۔ایک شعور کی بیداری ہے ، اندھیر نگری میں روشنی کی ایک کرن ہےاور موروثی سیاست کے بحر بے کنار میں ایک جزیرہ ہے۔

البتہ قائد انصاف کا اس شکست کو فراخ دلی سے قبول کرنابھی قابل تعریف ہے۔سوشل میڈیا پر ایک بیان میں کپتان نے اس شکست پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ [ ہر شکست دراصل کئی سبق سکھا تی ہے۔اور ہر کامیاب قوم اپنی غلطیوں سے سیکھتی ہے۔]
اللہ کرے کہ اس ملک سے اب موروثی سیاست کا دور دورہ ختم ہواور لودھراں کے یہ انتخابات سیاست میں موروثیت کے خاتمہ کیلئے سنگ میل ثابت ہوں۔انشاء اللہ

Print this entry

Comments

comments